Home / تازہ ترین / شان پٹیل

شان پٹیل

ستائیس سالہ شان پٹیل بھارتی امریکی شہری ہیں، جو امریکہ کی ریاست نواڈا کے مشہورِ زمانہ شہر ”لاس ویگس“ میں پیدا ہوئے۔ شان پٹیل کے والدین لاس ویگس میں ایک چھوٹے موٹیل کے مالک تھے، اسی موٹیل میں ان کی رہائش تھی۔ یہ ایک چھوٹا سا موٹیل تھا جسے شان پٹیل کے والدین گھنٹوں کے حساب سے کرایہ پر دیتے تھے۔ شان پٹیل کے مطابق انھوں نے اپنے بچپن میں نشے اور جسم کے کاروبار دیکھے۔ ان کا بچپن لاس ویگس میں گزرا، جہاں معیارِ تعلیم انتہائی گرا ہوا ہے۔ انھوں نے اپنی ابتدائی تعلیم کلارک ہائی سکول میں حاصل کی، جہاں تقریباََ آدھے بچے امریکی معیارِ تعلیم تک پہنچ ہی نہیں پاتے اورضلع کے چالیس فیصد طالبعلم سکول سے ہی تعلیم چھوڑ جاتے ہیں۔

شان پٹیل نے امریکی ٹیسٹ ایس اے ٹی میں مکمل چو بیس سو نمبر حاصل کیے جو کہ ایک بہت بڑی کامیابی ہے۔ لاکھوں امیدواروں میں سے چند ہی اتنے نمبر حاصل کرنے میں کامیاب ہوپاتے ہیں۔ بعد ازاں شان پٹیل نے امریکی طالبعلموں کی ایس اے ٹی ٹیسٹ کی تیاری کے لیے ادارہ بنایاجو انتہائی کامیابی سے چل رہاہے۔

تعلیمی لحاظ سے انتہائی برے حالات اور علاقے میں بچپن گزارنے کے باوجودشان پٹیل کے ہائی سکول کے نتائج اورتعلیمی میدان میں کامیابیاں انتہائی متاثر کن ہیں۔ وہ اپنی کلاس کے الوداعی خطیب ویلیڈکٹورین بنے، ان کو ہوم کمنگ کنگ کے اعزاز سے نوازا گیا، اور انھوں نے 2007میں وائیٹ ہاؤس کے صدارتی سکالر کے طور پر اس وقت کے امریکی صدر جارج بش سے ہاتھ ملایا۔ امریکہ کی ہر ریاست کے دو قابل ترین طالبعلموں کو ہر سال صدارتی سکالر کے اعزاز سے نوازا جاتا ہے۔

Shan Patel

شان پٹیل ہائی سکول میں ایک ہسپتال کے ایمرجنسی ڈیپارٹمنٹ میں رضاکارانہ طور پر کام کرتے تھے وہاں سے انھوں نے میڈیکل میں دلچسپی لینا شروع کی۔ شان پٹیل نے اپنا تعلیمی سفر جاری رکھا اور یونیورسٹی آف ساؤتھ کیلیفورینا میں بی اے،ایم ڈی کی مشترکہ ڈگری میں سکالر شپ کے ساتھ داخلہ لینے میں کامیاب ہوئے۔ انھوں نے میڈیکل ڈاکٹر بننے کی خواہش پر اس مشترکہ ڈگری پروگرام میں داخلہ لیا، کیونکہ اس کی بنیاد پر وہ مستقبل میں کسی بھی میڈیکل سکول میں داخلہ لے سکتے ہیں۔

شان پٹیل کے میڈیکل سکول کا پہلا سال شروع ہونے والا تھا جب انھوں نے ایس اے ٹی کی تیاری کو حوالے سے کتاب لکھنے کا ارادہ کیا، انھوں نے کئی جگہ کوشش کی لیکن انھیں کوئی پبلشر یا ایڈیٹر نہ مل سکا۔ انھوں نے کتاب لکھنے کا ارادہ فی الحال ترک کر کے اپنی سکالر شپ کے آخری نو سو ڈالر سے ایس اے ٹی ٹیسٹ کی تیاری کے حوالے سے ”ایکسپرٹ۰۰۴۲“نامی ویب سائیٹ کا آغاز کیا۔ جس کا مقصد طالبعلموں کو ایس اے ٹی ٹیسٹ کی تیاری کروانا ہے۔ شان پٹیل نے اس کمپنی کی مشہوری ایسے کی کہ یہ ایس اے ٹی ٹیسٹ کی تیاری کا واحد ادارہ ہے جہاں ٹیسٹ کی تیاری وہ شخص کرواتا ہے کہ جس نے خود ایس اے ٹی ٹیسٹ میں پرفیکٹ۰۰۴۲ نمبر حاصل کیے تھے۔

اس ویب سائیٹ پر شان پٹیل نے گرمیوں کی چھٹیوں میں پہلا کورس پڑھایا اور اس کورس میں موجود طالبعلموں نے اگلے ایس اے ٹی ٹیسٹ میں انتہائی اچھے نمبر حاصل کیے، پہلے کورس کے کامیاب نتائج کے بعد شان پٹیل نے تعلیم یافتہ قابل لوگوں کو اپنے طریقے کے مطابق ایس اے ٹی ٹیسٹ کی تیاری کروانے کی تربیت کی اور مختلف شہروں میں ٹیسٹ کی تیاری کروانے کا آغاز کیا۔ اس وقت امریکہ کے کئی شہروں میں ”ایکسپرٹ۰۰۴۲“ کامیابی سے چل رہی ہے اور طالبعلموں کی ٹیسٹ کی تیاری کروانے والی بہترین کمپنیوں میں شامل ہے، جبکہ شان پٹیل بہت جلد مزید کئی شہروں میں نئے سینٹرز قائم کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔ یہ کمپنی نو سو ڈالر سے شروع ہوئی تھی اور اب ملٹی ملین ڈالر کمپنی بن چکی ہے۔ شان پٹیل کی کمپنی کی کامیابی کو دیکھتے ہوئے انھیں کئی پبلشرز کی طرف سے کتاب لکھنے کی پیشکش کی گئی۔ شان پٹیل کی کتاب
”SAT 2400 in Just 7 Steps“
جولائی2012 میں شائع کی گئی۔

Check Also

اہلیہ فاطمہ پر تشدد ، محسن عباس نے جواب دے دیا

عروف گلوکار و اداکار محسن عباس نے اہلیہ کی جانب سے خود پر لگائے جانے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *