Home / انٹرنیشنل / سوڈان میں حالات مزید خراب ہونے لگے، آرمی میجر سمیت متعدد ہلاکتیں، احتجاج جاری

سوڈان میں حالات مزید خراب ہونے لگے، آرمی میجر سمیت متعدد ہلاکتیں، احتجاج جاری

سوڈان کے شہر خرطوم میں مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے آنسو گیس اور فائرنگ کا استعمال کیا جا رہا ہے جس کے نتیجے میں ایک آرمی میجر سمیت کئی شہریوں کی ہلاکت ہوئی ہے۔ اب تک کی اطلاعات کے مطابق سوڈان کے دارالحکومت خرطوم میں چار مظاہرین ہلاک ہو چکے ہیں، اور ابھی بھی مظاہرین اور حکام کے مابین کشیدگی جاری ہے۔

یہ احتجاج سوموار کے روزحکومت میں موجود فوجی حکام اور اپوزیشن عوامی رہنماؤں کے آپس میں اقتدار کی منتقلی کی ڈیل ہو جانے کے بعد شروع ہوا، جو کچھ ہی گھنٹوں میں شدت پکڑ گیا اور ہزاروں مظاہرین سڑکوں پر نکل آئے۔ پولیس نے مظاہرین کومنتشرکرنے کے لیے آنسو گیس اور فائرنگ کا استعمال کیا۔

آرمی کے میجر اور چار مظاہرین کی ہلاکت خرطوم میں فوجی ہیڈکوارٹر کے باہر جلسہ کے دوران ہوئی، اس جگہ پر پچھلے کئی ہفتوں سے مظاہرین موجود ہیں۔ اس کے علاوہ مزید تین فوجی اورکئی مظاہرین اور شہری شدید زخمی ہیں۔ ملٹری کونسل کے حکام نے کہا کہ یہ فائرنگ ”نامعلوم افراد“ کی طرف سے کی گئی ہے، آرمی کا ان لوگوں سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

آرمی کونسل نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ آرمی کبھی بھی پر امن مظاہرین پر فائر نہیں کر سکتی، یہ شدت پسند عناصر کا کام ہے جنہوں نے حالات خراب کرنے کے لیے اپنے راستے ہموار کر رکھے ہیں۔

فوجی انٹیلیجنس کے سربراہ حذیفہ ”عبدالملک“ نے کہا کہ ”یہ وہ لوگ ہیں جو گروہوں میں اشتعال پیدا کر رہے ہیں، وہ مسلح ہیں اور انھوں نے فوجی عملہ پر بھی فائرنگ کی ہے“۔

عمر البشیر کے تیس سالہ اقتدار کے خاتمے کے بعد عوام کا مطالبہ ہے کہ فوجی جرنیل جو اب اقتدار کی کرسی پر بیٹھے ہیں، وہ جلد از جلد کرسی چھوڑ دیں، اور حکومت عوامی نمائندوں کے حوالے کریں۔ اس عوامی احتجاج کو شروع ہوئے کئی ہفتے گزر چکے ہیں، گزشتہ روز ہوئی فوجی کونسل اور عوامی رہنماؤں کے مابین اقتدار کی منتقلی کی ڈیل کے بعد یہ احتجاج شدت پکڑ گیا ہے۔

Check Also

ایپل کے نئے آئی فون 11 کی پاکستان میں قیمت کیا ہوگی؟تفصیل اس خبرمیں

میں ایپل کے نئے آئی فون 11 کی پاکستان میں قیمت کیا ہوگی؟تفصیل اس خبر …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *